Connect with us
Monday,06-July-2020

(جنرل (عام

آئندہ مالی سال کے لیے زراعت پرالگ سے بجٹ پیش کیا جائے گا : راہل

Published

on

کانگریس کے صدر راہل گاندھی نے وزیراعظم نریندر مودی پر ملک کے عوام کے ساتھ بار بار جھوٹ بولنے کا الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ ان کی پارٹی کے اقتدار میں آنے کے بعد بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جےپی) کی قیادت والی حکومت کی تمام خامیوں کو جڑ سے ختم کیا جائے گا اور آئندہ مالی سال کے لیے زراعت پر الگ سے بجٹ پیش کیا جائے گا۔
مسٹر گاندھی نے ہفتے کے روزکرناٹک کے کولار میں انتخابی مہم کے تحت ’پریورتن یاترا‘ سے خطاب کرتے ہوئے مسٹر مودی پر سخت حملہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ وقت آگیا ہے کہ ملک کے عوام اس چیزکو سمجھیں کہ کیسے ان برسوں کے دوران مسٹر مودی نے انھیں بے وقوف بنایا۔ انہوں نے عوام کو یقین دلایا کہ گذشتہ پانچ برسوں کے دوران جن غلط اقدامات نے عوام کو بری طرح متاثر کیا ہے اور محض مالداروں کو فائدہ ہوا، ان میں اصلاحات کی جائیں گی۔

جرم

بیوی کی بیوفائی سے دلبرداشتہ شوہر نے 3 بچوں کا قتل کرکے خودکشی کرلی

Published

on

murder

اسپیشل اسٹوری : وفا ناہید
اس وقت ملک کورونا بحران سے گذر رہا ہے. کورونا جانی و مالی نقصان پہنچا رہا ہے اور لاک ڈاؤن نے معشیت کی کمر توڑ دی ہے . ایسے میں نالا سوپارہ میں ایک اندوہناک واقعہ پیش آیا. عورت گھر کی عزت ہوتی ہے اور یہ عزت جب گھر کی دہلیز پھلانگ جائے تو مرد کی عزت نفس بری طرح مجروح ہوتی ہے. کسی بھی مذہب میں عورت عزت و وقار کی علامت ہوتی ہے. مسلمانوں میں جہاں اسے نصف بہتر کہا جاتا ہے وہی اسے ہندوؤں میں اردھانگی یعنی آدھا جسم سمجھا جاتا ہے اور جب یہ عورت بے وفائی کردے تو سماج میں کسی کو منہ دکھانے کے قابل نہیں رہتے . ایسا ہی ایک دل دہلانے والا واقعہ نالا سوپارہ میں پیش آیا. جہاں بیوی کی بیوفائی سے دلبرداشتہ شوہر نے اپنی 2 بیٹیوں اور ایک بیٹے کا قتل کرکے خودکشی کرلی . ذرائع سے ملی تفصیلات کے نالا سوپارہ تلنج میں واقع ساڑی کمپاؤنڈ کے پاس بابل پاڑہ علاقے کے شویتا کالونی کے ساکن وجو پرمار نے پولس اسٹیشن میں شکایت درج کرائی کہ ان کے بیٹے کیلاش پرمار نے اپنی 2 بیٹیوں نلنی (7) , نینا (3) اور بیٹے نین (12) سالہ کا تیز دھار ہتھیار سے گلا کاٹ کر قتل کردیا اور پھر خودکشی کرلی . وجو پرمار دوپہر 4 بجے کے قریب پڑوس میں رہنے والے اپنے بیٹے کیلاش پرمار اور اس کے بچوں کو چائے نئے کے لئے بلانے گئے. لیکن کیلاش پرمار نے انہیں یہ کہہ کر لوٹا دیا کہ بچے سو رہے ہیں. رات 8 بجے تک بھی کیلاش پرمار اور بچے نہیں آئے تو وجو پرمار نے ایک بار پھر بیٹے کے در پر دستک دی مگر دروازہ اندر سے بند تھا. کیلاش پرمار کے دوست کو بلاکر دروازہ زور زور سے کھٹکھٹایا گیا لیکن کوئی جواب نہیں ملا تو دروازہ توڑ دیا گیا. اندر کا منظر انتہائی اندوہناک تھا. پورے گھر میں کیلاش پرمار کے ساتھ تینوں بچوںکی لاشیں خون میں لت پت بکھری پڑی تھیں. اس ضمن میں ملی مزید تفصیلات کے مطابق کیلاش پرمار کی بیوی 3 بچے چھوڑ کر 2 ماہ قبل کسی کے ساتھ بھاگ گئی تھی. فیس بک پر اپنی بیوی کی کسی غیر مرد کے ساتھ وائرل ہوئی تصویر کو دیکھ کر کیلاش پرمار اپنا ذہنی توازن کھوبیٹھا اور اس نے یہ انتہائی قدم اٹھالیا . تینوں بچوں کے قتل کے معاملے میں کہا جارہا ہے کہ کیلاش پرمار نے شاید انہیں نشہ آور چیز کھلائی تھی اور سوتے میں تیز دھار ہتھیار سے بچوں کا گلا ریت دیا ہوگا. ورنہ اگر بچے ہوش میں ہوتے تو شور مچاتے. لیکن پڑوسیوں نے کسی طرح کی ہلچل یا شور و غل کی آواز نہیں سنی . پولس نے موقعہ واردات سے چاقو برآمد کرنے کا دعوی کیا ہے. پولس نے کیلاش پرمار کے والد وجو پرمار کی شکایت پر قتل اور خودکشی کا مقدمہ درج کیا ہے. پولس کو موقعہ واردات پر ایک ساڑی بھی لٹکی ہوئی ملی. جس سے اندازہ لگایا جارہا ہے کہ پہلے کیلاش پرمار نے پھانسی لینے کی کوشش کی ہو . چونکہ کیلاش پرمار کے گلے پر بھی چاقو کا وار موجود ہے. اس کیس کی مزید تحقیقات نالا سوپارہ تلنج پولس کررہی ہیں.

Continue Reading

خصوصی

8 جولائی سے مہاراشٹر میں شرائط کے ساتھ کھل جائنگے ہوٹل، گیسٹ ہاؤسز اور لاج

Published

on

مہاراشٹرا حکومت نے لاک ڈاؤن کے بعد حالات کے ساتھ ‘مشن بیگن اگین’ کے تحت ہوٹل، گیسٹ ہاؤسز اور لاج کھولنے کی اجازت دے دی ہے۔ تاہم، یہ واضح طور پر بتایا گیا ہے کہ ہوٹل کا مطلب ہے ہوٹل میں رہنا۔ ابھی تک ریستوراں کے لئے کوئی آرڈر نہیں ہیں۔ حکم نامے کے مطابق کنٹینمنٹ زون کے باہر ہوٹل، گیسٹ ہاؤسز اور لاجز کو 8 جولائی سے کھولا جاسکتا ہے۔
ریاستی حکومت کے جاری کردہ حکم کے مطابق، ہوٹل کے کنٹینمنٹ زون سے باہر رہنے والے 33 فیصد لوگوں کو وہاں رہنے کی اجازت دی جاسکتی ہے۔ صرف ان لوگوں کو ہی جانے کی اجازت ہوگی جن کی ان جگہوں پر کوئی علامت نہیں ہے۔ تمام صارفین کی تھرمل اسکریننگ لازمی ہوگی اور سینیٹائزر کا انتظام کرنا پڑے گا۔
شرائط کے مطابق، مہمان اور ملازم دونوں کو ماسک پہننے کی ضرورت ہوگی۔ اگر AC استعمال کرنا ہے تو، اس کا درجہ حرارت 24 سے 30 ڈگری کے درمیان رکھنا ہوگا۔ ہوٹل میں ڈیجیٹل ادائیگی کرنے کا مشورہ دیا گیا ہے۔ مہمان کے لئے اروگیا سیٹو ایپ کا ہونا بھی لازمی ہے۔ بیٹھنے والے مقام پر بھی سماجی دوری کی پیروی کرنا ہوگی۔ اگر کورینٹائین سینٹر کیلئے کوئی ہوٹل استعمال ہورہا ہے تو پھر بھی اس کا استعمال جاری رہے گا۔

Continue Reading

سیاست

مفتی محمد اسمٰعیل قاسمی و مستقیم ڈگنیٹی کی قیادت میں سرکردہ افراد کی ایڈیشنل S P سے ملاقات

Published

on

آج بروز پیر دوپہر ساڑے 12 بجے مفتی محمد اسمٰعیل قاسمی و مستقیم ڈگنیٹی کی قیادت میں ایک وفد نے ایڈیشنل S P سے ملاقات کرتے ہوئے شہر میں ہورہی غنڈہ گردی قتل غارت گری اور نشہ آور اشیاء اور شہر میں ریوالور کے کاروبار کے خلاف تبادلۂ خیال کرتے ہوئے تشویش کا اظہار کیا!
کل بروز اتوار شام 5 بجے کارپوریٹر منصور احمد کے بھائی سے معمولی تکرار کا بہانہ لیکر کچھ غنڈوں نے اپنا سیاسی انتقام لینے کی کوشش کی اور تھوڑی ہی دیر میں پروفیسر رضوان خان فائرنگ معاملے کا مفرور ملزم جو کے 4 مہینوں سے پولیس کی گرفت سے فرار ہے وہ کارپوریٹر منصور احمد کے گھر کے سامنے اپنے کچھ ساتھیوں سمیت وارد ہوا اور کارپوریٹر منصور احمد کے گھر کے سامنے ریوالور لیکر تمام افراد خانہ کو للکارنے لگا یہاں تک کے کارپوریٹر منصور احمد کے بڑے بھائی سے ریوالور کی نوک پر ہاتھا پائی کرتے ہوئے مار دھاڑ بھی کی گئی. اس مفرور ملزم کا نشانہ کارپوریٹر منصور احمد تھے جو ریوالور باز غنڈے کے سامنے نہیں آئے تو اس غنڈے نے کارپوریٹر منصور احمد کے گھر کی جانب ریوالور کا رخ کرتے ہوئے فائرنگ کردی اور علاقے میں دہشت کا ماحول پیدا کیا.
آج اسی سوال کو لیکر مفتی محمد اسمٰعیل قاسمی اور دیگر سرکردہ افراد نے ایڈیشنل S P کو تمام حالات سے آگاہی کرتے ہوئے سخت کاروائی کی مانگ کی. جس کے بعد منصور شبیر احمد فائرنگ معاملے کے بعد پولیس محکمہ حرکت میں آیا اور فائرنگ کرنے والے مفرور ملزم شیرا جو کہ پروفیسر رضوان خان فائرنگ معاملے میں بھی شامل تھا وہ 4 مہینوں سے فرار تھا لیکن آج پولیس نے اس شیرا کو دھولیہ سے گرفتار کرلیا ہے۔
اگر شیرا کی گرفتاری پہلے ہی ہوجاتی تو آج یہ واقعہ پیش نہیں آتا جو سیاسی انتقام جو کے کسی کے اشاروں پر لیا جارہا ہے یہ شہر کی عوام بخوبی جانتی ہے ۔
مفتی محمد اسمٰعیل قاسمی اور وفد میں شامل سرکردہ افراد کی جانب سے اعلیٰ حکام سے مطالبہ کیا گیا ہے کہ ایسے غنڈے جو سماج میں دہشت پھیلانے کی کوشش کرتے ہیں ان پر M P D A قانون کے تحت کاروائی کی جائے تب ہی شہر سے غنڈہ گردی کا خاتمہ یقینی ہیں
آج کے اس وفد میں
مفتی محمد اسمٰعیل قاسمی , محمد مستقیم ڈگنیٹی , حاجی اطہر حسین اشرفی , پروفیسر رضوان خان , سہیل عبدالکریم (سابق کونسلر), کارپوریٹر منصور احمد , ابوشعیب نہالی , شیخ انیس مستری , عبدالرحمن انصاری , افتخار بیل باغ , مولانا علیم فلاحی , عبدالباسط , نعیم احمد کے علاوہ شہر کے سرکردہ افراد شامل تھے .

Continue Reading
Advertisement

رجحان

WP2Social Auto Publish Powered By : XYZScripts.com