Connect with us
Monday,06-July-2020

سیاست

پندرہویں انتخابات: لال کرشن اڈوانی پر بھاری پڑے منموہن سنگھ

Published

on

پانچ سال تک مرکز میں کامیاب مخلوط حکومت چلانے والی کانگریس نے 2009 کے عام انتخابات میں پچھلی دفعہ کے مقابلے بہتر کارکردگی کا مظاہرہ اور اتحادیوں کے ساتھ مل کر دوبارہ حکومت بنائی جبکہ بھارتیہ جنتا پارٹی کی جانب سے وزیراعظم کے عہدے کے امیدوار بن کرانتخابی میدان میں اترے سینئر لیڈر لال کرشن اڈوانی کوئی کرشمہ نہیں دکھا سکے۔
کانگریس نے اس انتخاب میں مسٹر منموہن سنگھ کو ہی وزیراعظم کے عہدہ کا امیدوار قرار دیا تھا اور وہ مسلسل دوسری بار وزیراعظم بنے تھے۔ اس الیکشن میں بھی اگرچہ کسی بھی پارٹی کو واضح اکثریت حاصل نہیں ہوئی تھی لیکن کانگریس کی سیٹیں بڑھ کر 206 ہوگئیں اور اس کی قیادت میں متحدہ ترقی پسند اتحاد کی دوبارہ حکومت بنی۔ کانگریس نے اس انتخاب میں اتر پردیش میں اپنی پوزیشن کچھ حد تک مضبوط کرلی لیکن بہار میں وہ صرف دو سیٹوں پر سمٹنے پر مجبور ہوئی تھی۔ بی جے پی بہار میں بہتر کارکردگی کا مظاہرہ کرنے میں کامیاب رہی لیکن راجستھان میں وہ سابقہ کارکردگی کو دہرانے میں ناکام رہی تھی۔
اس انتخاب کی ایک اور خاص بات یہ رہی کہ مغربی بنگال میں سیاسی تسلط والی مارکسی کمیونسٹ پارٹی کو زبردست جھٹکا لگا اور وہاں ترنمول کانگریس نے کافی اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کیا تھا۔ سماجوادی پارٹی اور بہوجن سماج پارٹی کو اتر پردیش میں، جنتا دل (یو) کو بہار میں اور بیجو جنتا دل کو اڈیشہ میں کامیابی حاصل ہوئی تھی۔ آر جے ڈی لیڈر لالو پرساد یادو نے دو حلقوں میں سارن اور پاٹلی پتر سے الیکشن لڑا لیکن پاٹلی پتر سیٹ پر وہ ہار گئے تھے۔ لوک جن شکتی پارٹی کے لیڈر رام ولاس پاسوان کو حاجی پور سیٹ پر شکست ہاتھ لگی۔

Continue Reading
Click to comment

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

جرم

دہلی میں کوروناکے معاملے ایک لاکھ سے زیادہ

Published

on

راجدھانی میں 1379نئے معاملات سامنے آنے پیر کو کورونا مریضوں کی مجموعی تعداد ایک لاکھ سے تجاوز کرگئی۔
دہلی حکومت کی وزارت صحت کی طرف سے آج جاری اعدادو شمار کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں میں 1379نئے معاملات سے متاثرین کی مجموعی تعداد ایک لاکھ 823ہوگئی۔
مہاراشٹر اور تملناڈو کے بعد دہلی تیسری ریاست ہے جہاں متاثرین کی تعداد لایک لاکھ سے زیادہ ہے۔
اس دوران 48مزید مریضوں کی موت سے مرنے والوں کی مجموعی تعداد 3115ہوگئی ہے۔
اس دوران پابندی والے علاقوں کی تعداد ایک کم ہوکر 455رہ گئی۔فعال معاملات کی تعداد 25260ہے۔

Continue Reading

جرم

بیوی کی بیوفائی سے دلبرداشتہ شوہر نے 3 بچوں کا قتل کرکے خودکشی کرلی

Published

on

murder

اسپیشل اسٹوری : وفا ناہید
اس وقت ملک کورونا بحران سے گذر رہا ہے. کورونا جانی و مالی نقصان پہنچا رہا ہے اور لاک ڈاؤن نے معشیت کی کمر توڑ دی ہے . ایسے میں نالا سوپارہ میں ایک اندوہناک واقعہ پیش آیا. عورت گھر کی عزت ہوتی ہے اور یہ عزت جب گھر کی دہلیز پھلانگ جائے تو مرد کی عزت نفس بری طرح مجروح ہوتی ہے. کسی بھی مذہب میں عورت عزت و وقار کی علامت ہوتی ہے. مسلمانوں میں جہاں اسے نصف بہتر کہا جاتا ہے وہی اسے ہندوؤں میں اردھانگی یعنی آدھا جسم سمجھا جاتا ہے اور جب یہ عورت بے وفائی کردے تو سماج میں کسی کو منہ دکھانے کے قابل نہیں رہتے . ایسا ہی ایک دل دہلانے والا واقعہ نالا سوپارہ میں پیش آیا. جہاں بیوی کی بیوفائی سے دلبرداشتہ شوہر نے اپنی 2 بیٹیوں اور ایک بیٹے کا قتل کرکے خودکشی کرلی . ذرائع سے ملی تفصیلات کے نالا سوپارہ تلنج میں واقع ساڑی کمپاؤنڈ کے پاس بابل پاڑہ علاقے کے شویتا کالونی کے ساکن وجو پرمار نے پولس اسٹیشن میں شکایت درج کرائی کہ ان کے بیٹے کیلاش پرمار نے اپنی 2 بیٹیوں نلنی (7) , نینا (3) اور بیٹے نین (12) سالہ کا تیز دھار ہتھیار سے گلا کاٹ کر قتل کردیا اور پھر خودکشی کرلی . وجو پرمار دوپہر 4 بجے کے قریب پڑوس میں رہنے والے اپنے بیٹے کیلاش پرمار اور اس کے بچوں کو چائے نئے کے لئے بلانے گئے. لیکن کیلاش پرمار نے انہیں یہ کہہ کر لوٹا دیا کہ بچے سو رہے ہیں. رات 8 بجے تک بھی کیلاش پرمار اور بچے نہیں آئے تو وجو پرمار نے ایک بار پھر بیٹے کے در پر دستک دی مگر دروازہ اندر سے بند تھا. کیلاش پرمار کے دوست کو بلاکر دروازہ زور زور سے کھٹکھٹایا گیا لیکن کوئی جواب نہیں ملا تو دروازہ توڑ دیا گیا. اندر کا منظر انتہائی اندوہناک تھا. پورے گھر میں کیلاش پرمار کے ساتھ تینوں بچوںکی لاشیں خون میں لت پت بکھری پڑی تھیں. اس ضمن میں ملی مزید تفصیلات کے مطابق کیلاش پرمار کی بیوی 3 بچے چھوڑ کر 2 ماہ قبل کسی کے ساتھ بھاگ گئی تھی. فیس بک پر اپنی بیوی کی کسی غیر مرد کے ساتھ وائرل ہوئی تصویر کو دیکھ کر کیلاش پرمار اپنا ذہنی توازن کھوبیٹھا اور اس نے یہ انتہائی قدم اٹھالیا . تینوں بچوں کے قتل کے معاملے میں کہا جارہا ہے کہ کیلاش پرمار نے شاید انہیں نشہ آور چیز کھلائی تھی اور سوتے میں تیز دھار ہتھیار سے بچوں کا گلا ریت دیا ہوگا. ورنہ اگر بچے ہوش میں ہوتے تو شور مچاتے. لیکن پڑوسیوں نے کسی طرح کی ہلچل یا شور و غل کی آواز نہیں سنی . پولس نے موقعہ واردات سے چاقو برآمد کرنے کا دعوی کیا ہے. پولس نے کیلاش پرمار کے والد وجو پرمار کی شکایت پر قتل اور خودکشی کا مقدمہ درج کیا ہے. پولس کو موقعہ واردات پر ایک ساڑی بھی لٹکی ہوئی ملی. جس سے اندازہ لگایا جارہا ہے کہ پہلے کیلاش پرمار نے پھانسی لینے کی کوشش کی ہو . چونکہ کیلاش پرمار کے گلے پر بھی چاقو کا وار موجود ہے. اس کیس کی مزید تحقیقات نالا سوپارہ تلنج پولس کررہی ہیں.

Continue Reading

قومی خبریں

بھیما کوریگاؤں: سپریم کورٹ نے گوتم نولکھا کے معاملے میں دہلی ہائی کورٹ کا حکم ردکیا

Published

on

supream

سپریم کورٹ نے پیر کے روز مہاراشٹر کے بھیما کوریگاؤں معاملے میں دہلی ہائی کورٹ کے اس حکم کو رد کردیا، جس میں اس نے قومی تفتیشی ایجنسی (این آئی اے) کو ملزم گوتم نولکھا کو دہلی سے ممبئی منتقل کرنے سے متعلق پیشی وارنٹ ریکارڈ پیش کرنے کی ہدایت دی تھی۔
عدالت عظمی نے کہا کہ دہلی ہائی کورٹ کو اپنے دائرہ اختیار سےتجاوز نہیں کرنا چاہئے تھا۔
جسٹس ارون مشرا، جسٹس نوین سنہا اور جسٹس اندرا بنرجی پر مشتمل ڈویژن بنچ نے دہلی ہائی کورٹ کے 27 مئی کے حکم کو چیلنج کرنے والی این آئی اے کی اپیل منظور کرتے ہوئے تحقیقاتی ایجنسی کے خلاف کیے جانے والے غیر ضروری تبصرے کو بھی ہٹانے کی ہدایت دی۔
تفتیشی ایجنسی نے دہلی اور ممبئی میں این آئی اے کی خصوصی عدالت میں جاری کارروائیوں کا وہ ریکارڈ طلب کرنے کے ہائی کورٹ کے حکم کے خلاف اپیل دائر کی تھی، جس کی بنیاد پر گوتم نولکھا کو دہلی سے ممبئی منتقل کیا گیا تھا۔ تفتیشی ایجنسی نے یہ کہتے ہوئے چیلنج کیا تھا کہ اس کیس کی سماعت دہلی ہائی کورٹ کے دائرہ اختیار میں نہیں ہے۔
دہلی ہائی کورٹ نے اپنے حکم میں کہا تھا کہ این آئی اے نے گوتم نولکھا کو ممبئی لے جانے کے لئے غیر ضروری جلد بازی کی تھی جبکہ ان کی عبوری ضمانت کی درخواست زیر التواء تھی۔

Continue Reading
Advertisement

رجحان

WP2Social Auto Publish Powered By : XYZScripts.com