Connect with us
Friday,03-July-2020

بین الاقوامی خبریں

اگلے ماہ پوتن اور کم کر سکتے ہیں ملاقات

Published

on

روس کے صدر ولادیمیر پوتن اور شمالی کوریا کے سربراہ کم جونگ ان کے درمیان اگلے ہفتے ملاقات کا امکان ہے۔
يونها پ نیوز ایجنسی کے مطابق مسٹر پوتن ایک پروگرام میں حصہ لینے کے لئے 24 اپریل کو مشرقی ایشیا کا دورہ کریں گے۔ اس دورے کے دوران مسٹر پوتن اور مسٹر کم کے درمیان ملاقات ہو سکتی ہے۔
اس ماہ کے اوائل میں مسٹر پوتن کے ساتھی یوری اشاكوو نے دونوں ممالک کے سربراہوں کے درمیان ملاقات کے متعلق کہا تھا کہ روس نے تاریخ مقرر کرنے کے لئے خصوصی پیشکش رکھی ہے اور اس معاملے پر بحث کی جا رہی ہے۔
واضح رہے کہ مسٹر ٹرمپ اور مسٹر کم نے گزشتہ ہفتے ہی تیسری ملاقات کا امکان کا اظہار کیا ہے۔ مسٹر ٹرمپ نے جمعرات کو وائٹ ہاؤس میں جنوبی کوریا کے صدر مون جے ان کے ساتھ دو طرفہ میٹنگ سے پہلے صحافیوں سے یہ بات کہی۔وہیں مسٹر کم کی امریکی صدر سے ملنے کی خواہش کے متعلق شمالی کوریا کی سرکاری خبر رساں ایجنسی ’کوریائی سینٹرل نیوز ایجنسی ‘ نے ہفتہ کو اطلاع دی۔

بین الاقوامی خبریں

پاکستان میں خوفناک ٹرین حادثہ، 20 سکھ مسافر ہلاک

Published

on

پاکستان کے صوبہ پنجاب میں جمعہ کے روز ایک خوفناک ٹرین حادثے میں ایک مسافرٹرین سے عقیدت مندوں سے بھری ہوئی وین جا ٹکرائی۔ اس واقعے میں کم از کم 20 سکھ مسافر ہلاک ہوگئے۔
اس حادثے میں کم از کم آٹھ مسافر زخمی ہوئے ہیں۔ انتظامیہ اور راحت ساں اور امدادی کارکن موقع پر پہنچ کر زخمیوں کو اسپتال پہنچایا۔ بتایا گیا ہے کہ یہ حادثہ بغیر کسی رکاوٹ کے ایک کراسنگ پر پیش آیا۔
شیخوپورہ کے ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر غازی صلاح الدین نے حادثے کی اطلاع دی ہے۔یہ حادثہ پنجاب کے شیخوپورہ کے فرخ آباد میں پیش آیا ہے۔ کراچی سے لاہور جانے والی شاہ حسین ایکسپریس مسافر ٹرین شیخوپورہ جانے والی وین سے ٹکرا گئی۔ یہ سکھ عقیدت مند شیخوپورہ ضلع میں گرودوارہ سچا سودہ واپس آ رہے تھے۔ وہ مذہبی رسومات ادا کرنے گئے تھے۔

Continue Reading

بین الاقوامی خبریں

کورونا کے ساتھ موٹاپا مہلک ثابت ہوسکتا ہے: ڈبلیو ایچ او

Published

on

ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن (ڈبلیو ایچ او) نے کہا ہے کہ موٹاپے کے شکار اور تمباکو نوشی کرنے والے لوگوں کو کووڈ 19 سے زیادہ خطرہ کا سامنا ہے۔
ڈبلیو ایچ او کے چیف سائنسدان ڈاکٹر سومیا سوامی ناتھن نے جمعرات کے روز گلوبل ریسرچ اینڈ انوویشن فورم کے اجلاس کے بعد کووڈ ۔19 پر ایک پریس کانفرنس کے دوران کہا کہ نوجوانوں میں موٹاپا سمیت کچھ بیماریوں کے شکار افراد میں کورونا کا خطرہ زیادہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ “ہمیں یہ یاد رکھنا چاہئے کہ نوجوان شدید بیمار بھی ہوسکتے ہیں یا اس کی موت بھی ہوسکتی ہیں۔ خاص طور پر موٹے افراد ، تمباکو نوشی کرنے والوں کے کورونا سے شدید بیمار پڑنے یا ان کی موت کا زیادہ خطرہ ہوتا ہے”۔
فورم کے دو روزہ اجلاس میں یہ بھی انکشاف ہوا ہے کہ کورونا سے متاثرین کی جتنی تعداد کی تصدیق ہوئي ہے، حقیقت میں متاثرہ افراد کی تعداد اس سے 10 گنا زيادہ ہوسکتی ہے۔ شرح اموات کے حوالے سے ایک سوال کے جواب میں ڈاکٹر سومیا سوامی ناتھن نے کہا کہ جن جگہوں پر سیرولوجی ٹیسٹ کیے گئے ہیں وہاں لوگوں کے جسم میں کورونا کی اینٹی باڈیز کی موجودگی سے پتہ چلتا ہے کہ متاثرہ افراد کی تعداد عام طور سے 10 گنا زیادہ ہے اور متاثرہ افراد کی موت کی شرح 0.6 فیصد ہے۔
انہوں نے کہا کہ “متاثرہ افراد کی اموات کی شرح انتہائی کم ہے اور (فورم کی میٹنگ میں) اسے اوسطا 0.6 فیصد بتایا گیا ہے ۔ یہ تصدیق شدہ معاملوں کے تناسب میں جو پانچ، چھ یا سات فیصد موت کی شرح بتائي جاتی ہے، یہ اس سے بہت کم ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں نہیں معلوم کہ معاشرے میں کتنے لوگ متاثر ہیں۔ ہم صرف ان لوگوں کے اعداد و شمار جانتے ہیں جن کی جانچ کی جاتی ہے۔ یہ وہ لوگ ہیں جو بیمار ہوتے ہیں یا ٹیسٹ کیے جانے کے اہل ہوتے ہیں۔

Continue Reading

بین الاقوامی خبریں

امریکہ میں کورونا متاثرین کی تعداد ایک لاکھ سے متجاوز

Published

on

امریکہ میں کورونا وائرس سے متاثر ہونے والوں کی تعداد 27 لاکھ سے تجاوز کر گئی ہے۔
امریکہ کی جان ہاپکنس یونیورسٹی کے سائنس اینڈ انجینئرنگ سینٹر (سی ایس ایس ای) کی جانب سے جاری اعداد و شمار کے مطابق اب تک کوویڈ 19 سے 2711603 افراد متاثر ہوئے ہیں جبکہ 128385 افراد اپنی زندگی سے ہاتھ دھو بیٹھے ہیں۔ امریکہ کا نیویارک اس مہلک وائرس کی وجہ سے سب سے زیادہ متاثر ہوا ہے۔ یہاں اب تک 394954 افراد اس وبا سے متاثر ہوچکے ہیں اور 32043 افراد مرچکے ہیں۔ جبکہ کیلیفورنیا ، ٹیکساس ، نیو جرسی ، فلوریڈا ، الینوائے اور میساچوسٹس میں بالترتیب ایک لاکھ سے زائد افراد اس کی زد میں آچکے ہیں۔
امریکہ میں بدھ کے روز اس انفیکشن کے 50 ہزار سے زیادہ کیس درج کئے گئے تھے۔

Continue Reading
Advertisement

رجحان

WP2Social Auto Publish Powered By : XYZScripts.com