Connect with us
Sunday,05-July-2020

قومی

مسلم یونیورسٹی میں دھرنے پر بیٹھے طلباء کا ساتویں روز بھی دھرنا جاری

Published

on

علی گڑھ مسلم یونیورسٹی میں طلباءو بی جے پی لیڈران کے درمیان ہوئے تصادم کے بعد اپنے مطالبات کو لیکر دھرنے پر بیٹھے طلباء کا ساتویں روز بھی دھرنا جاری ہے جہاں سیاسی جماعتوں سمیت سابق طلباء کے وفود کے آنے کا سلسلہ جاری ہے وہیں مقرین اپنے اپنے طریقہ سے طلباء کی حوصلہ افزائی کے لئے دھرنے کو جائز ٹھہرانے کا کام کر رہے ہیں وہیں دوسری جانب بر سر اقتداربھارتیہ جنتا پارٹی کے لیڈران بھی طلباء کے خلاف کاروائی کئے جانے کے لئے متعدد وزراء وافسران پر دباؤ بنائے ہیں۔
ضلع و پولس انتطامیہ بھی اپنی کوششوں سے حالات پر نظر بنائے رکھنے کے علاوہ جانچ کے بعد کاروائی کئے جانے کی مہم میں لگا ہوا ہے۔
واضح ہو کہ گذشتہ کئی روز قبل مسلم یونیورسٹی میں منعقد ہونے والی تمام مسلم تنظیموں کے اعلیٰ عہدے داران کی ایک سیمینار میں ایم آئی ایم کے صدر و ممبر پارلیامنٹ اسد الدین اویسی کی شمولیت کی مخالفت کر رہے بی جے پی کارکنان کی کارگذاری کی کوریج کرنے کے نام پر ایک پرائیویٹ چینل کی اینکر نے بغیر اجازت مسلم یونیورسٹی کیمپس میں داخل ہوکر اس وقت سنسنی پھیلا دی جب اس نے لائیو ٹیلی کاسٹ کے دوران مسلم یونیورسٹی کو دہشت گردی کا اڈہ بتاتے ہوئے اپنا بیان جاری رکھا حالانکہ اس درمیان طلباء کے وہاں پہنچنے سے قبل ہی سیکیورٹی افسران نے اس لائیو کوریج کو روکنے کی پر زور کوشش کی لیکن ٹی وی رپورٹر اس کے باوجود اپنا کوریج اسی طرح جاری رکھا یہاں تک کہ کیمپس میں طلباء کی بھیڑ جمع ہو گئی اور ٹی وی رپورٹر کو وہاں سے جانا پڑا اسی دوران بے جے پی کے لیڈر مکیش لودھی اور ان کے ہمراہ ایل ایل ایم کے طالب علم اجے سنگھ بھی وہاں پہنچ گئے ٹی وی پورٹر کی حمایت میں وہ طلباء سے الجھ گئے جہاں دونوں گروہوں کے درمیان بحث کے بعد معاملہ مارپیٹ تک جا پہنچا ۔اجے سنگھ کی دادا ٹھاکر دلویر سنگھ موجودہ حکومت میں ممبر اسمبلی ہیں ۔اس اثر رسوخ کے سبب اجے سنگھ و مکیش لودھی کی تحریر پر طلباء کے خلاف ملک سے غداری تک کے الزامات عائد کرتے ہوئے پولس نے رپورٹ درج کر لی لیکن طلباء کی تحریر پر کسی کے بھی خلاف کوئی رپورٹ نہ لئے جانے سے ناراض طلباء یونین مسلم یونیورسٹی طلباء کے ساتھ ساتھ روز سے دھرنے پر ہے ۔جہاں اے ایم یو اولڈ بوائز ایسو سی ایشن دہلی کے عہدے داران نے طلباء سے دھرنے پر جاکر ملاقات کی۔
اس درمیان طلباء یونین کے سابق صدر و دہلی ہائی کورٹ کے معروف وکیل زیڈ کے فیضان نے طلباء کو یقین دہانی کرائی ہے کہ جو بھی قانونی و دیگر مدد ممکن ہوگی اس کو ہر صورت میں ان کی جانب سے دیا جائیگا۔ایسو سی ایشن دہلی کی سیکریٹری جنرل فوزیہ رحمان نے کہا کہ جس طرح سے طالبات دھرنے پر موجود ہیں اور اپنے ادارے کے تحفظ اور اپنے حقوق کے لئے میدان میں ہیں اس سے معلوم ہوتا کہ آج مسلم یونیورسٹی کا طالب علم کسی سے کمزور نہیں ہے وہ اپنے حق کو لینا جانتا ہے۔
انہوں نے اعلان کیا کہ طلباء کے جائز مطالبات کے لئے وہ دہلی میں جنتر منتر پر ایک روزہ دھرنا بھی دیں گی تاکہ حکومت کو یہ احساس کرایا جا سکے کہ مسلم یونیورسٹی کے طلباء اکیلے نہیں ہے اور ان کے ساتھ لاکھوں وہ افراد بھی ہیں جو پوری دنیا میں اس ادارے کی بقاء کے لئے سرگرم عمل ہیں۔

بزنس

ممبئی: ریلوے پٹریوں پر دوڑنے کے لئے تیار ہیں 350 لوکل ٹرینیں، جانئے کون کون کرسکتا ہے سفر؟

Published

on

مہاراشٹر کے دارالحکومت ممبئی میں کورونا بحران کے درمیان 350 مقامی ٹرینیں ریلوے ٹریک پر دوڑنے کے لئے تیار ہیں۔ بدھ کے روز وسطی ریلوے نے شہر میں ٹرینوں کے آپریشن سے متعلق ایک اہم فیصلہ لیا۔ اس کے تحت بدھ سے شہر میں 350 مقامی ٹرینوں کو چلانے کی اجازت دی گئی۔ تاہم عام شہری ٹرینوں میں سفر نہیں کرسکیں گے۔ صرف مرکزی اور ریاستی حکومت کے ذریعہ شناخت ہوگی اور ضروری خدمات سے منسلک افراد ہی مقامی ٹرینوں کا استعمال کرسکیں گے۔
بھارتی ریلوے نے منگل کو ریاستی اور مرکزی حکومت کی منظوری کے بعد مقامی ٹرینوں کی خدمات کو بڑھانے کا فیصلہ کیا ہے۔ تاہم ابھی عام مسافروں کو سفر کی اجازت نہیں ہے۔ ریلوے کے فیصلے کے مطابق وسطی اور مغربی علاقوں میں 350 ٹرینیں شروع کی جائیں گی۔ جن لوگوں کو مقامی ٹرینوں میں سفر کرنے کی اجازت ہے وہ مرکزی حکومت کے ملازمین، آئی ٹی، جی ایس ٹی، کسٹم، پوسٹل، قومی بینک، ایم بی پی ٹی، عدلیہ، دفاع اور راج بھون شامل ہیں۔ قابل غور بات یہ ہے کہ سینٹرل ریلوے ممبئی ڈویژن میں 200 ٹرینیں چلاتی ہے۔ بدھ کے روز اس میں مزید 150 ٹرینیں شامل کی گئی۔
موصولہ خبروں کے مطابق مہاراشٹر میں کورونا کیسز رکنے کا نام ہی نہیں لے رہے ہے ایسی صورتحال میں ریاستی حکومت نے ریاست میں لاک ڈاؤن کو 31 جولائی تک بڑھا دیا ہے۔ ملک میں کورونا سے متاثرہ ہر روز 4 ہزار سے زیادہ نئے کیسز سامنے آئے ہیں۔ ریاست میں کورونا مریضوں کی تعداد ایک لاکھ 74 ہزار 761 ہوگئی ہے۔ مہلک وائرس سے اب تک مجموعی طور پر 7 ہزار 855 افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔

Continue Reading

بزنس

رائٹس ایشو حصص کی شاندار انٹری، کمپنی کے مارکیٹ کیپ 10.92 لاکھ کروڑ کے ریکارڈ سطح پر

Published

on

مکیش امبانی کی ریلائنس انڈسٹریز کے رائٹ ایشو نے پیر کو شاندار انٹری کے ساتھ تاریخ رقم کی اور کمپنی کا مارکیٹ سرمایہ اب تک کے سب سے اعلی ترین مقام 10.92 لاکھ کروڑ روپے پر پہنچ گیا۔
پیر کو کاروبار میں نیشنل اسٹاک ایکسچینج (این ایس ای) میں ریلائنس کے حصص نے اب تک کے ریکارڈ شرح 1626.95 روپے کی سطح کو چھو لیا۔ ریلائنس کی مارکیٹ سرمایہ اب 11 لاکھ کروڑ روپے سے صرف آٹھ ہزار کروڑ روپے دور پیر کو 10 لاکھ 92 ہزار کروڑ روپے ہو گیا۔
ملک میں درج فہرست کوئی کمپنی 11 لاکھ کروڑ کا مارکیٹ کیپ ڈیٹا آج تک نہیں چھو سکی ہے۔ آج نیشنل اسٹاک ایکسچینج پر ریلائنس کے دو کروڑ 45 لاکھ حصص کی خرید وفروخت ہوئی۔ شیئر 1612.30 روپے پر بند ہوا۔
رائٹ ایشو نے درج ہونے کے تمام اندازوں کو غلط ثابت کیا۔ ریلائنس کے جزوی ادائیگی حصص کی پیر کو شاندار لسٹنگ ہوئی۔ حصص 690 روپے کے بھاؤ پر کھلا اور 710.65 روپے کی بلند ترین سطح کو چھولیا۔ مارکیٹ بند ہونے پر ریلائنس کے جزوی ادائیگی شیئر قیمت 698 روپے تھا۔ ریلائنس کے جزوی حصص میں ڈلیوری 59.93 فیصد دیکھی گئی۔مزید ڈلیوری کو مارکیٹ میں سرمایہ کاروں کے اعتماد کے طور پر دیکھا جاتا ہے۔

Continue Reading

بزنس

راجدھانی دلی میں پٹرول کی قیمت 75 روپے سے تجاوز

Published

on

petrol

قومی راجدھانی دلی میں پٹرول کی قیمت سنیچر کو 59 پیسے کے اضافے کے ساتھ 75 روپے فی لیٹر اور ڈیزل کی قیمت 58 پیسے بڑھ کر 73 روپے فی لیٹر سے زیادہ ہوگئی ہے۔
ملک میں پٹرول۔ ڈیزل کے دام میں ساتویں دن بڑا اضافہ کیا گیا ہے۔ ان سات دنوں میں دلی میں پٹرول 3.90 روپے یعنی 5.47 فیصد اور ڈیزل چار روپے یعنی 5.76 فیصد مہگا ہوچکا ہے۔
ملک کی سب سے بڑی تیل تقسیم کرنے والی کمپنی انڈین آئل کارپوریشن کے مطابق دلی میں پٹرول کی قیمت سنیچر کو 59 پیسے بڑھ کر 75.16 روپے فی لیٹر پر پہنچ گئی ہے۔ یہ اس برس 18 جنوری کے بعد کی اس کی اعلی سطح ہے۔ ڈیزل بھی 58 پیسے مہنگا ہوکر 73.39 روپے فی لیٹر کے دام میں فروخت ہوا جو 2 نومبر 2018 کے بعد کی اس کی سب سے زیادہ خوردہ قیمت ہے۔
پٹرول کی قیمت کولکاتااور ممبئی میں 55۔55 پیسے بڑھ کر بالترتیب 77.05 اور 82.10 روپے فی لیٹر پر پہنچ گئی ہے۔ چنئی میں یہ 51 پیسے بڑھ کر 78.99 روپے فی لیٹر رہی۔
کولکاتا میں ڈیزل 53 پیسے مہنگا ہوکر 69.23 روپے، ممبئی میں 55 پیسے مہنگا ہوکر 72.03 روپے اور چنئی میں 49 پیسے کے اضافے کے ساتھ 71.64 روپے فی لیٹر فروخت ہوا۔
ملک کے چار اہم شہروں میں پٹرول اور ڈیزل کے دام (روپے فی لیٹر میں) اس طرح رہے۔
میٹرو شہر ———– پٹرول —————– ڈیزل
دہلی ———— 75.16 ——- 73.39
کولکتہ ——— 77.05 ——- 69.23
ممبئی ————- 82.10 ——- 72.03
چنئی ———— 78.99 ——- 71.64

Continue Reading
Advertisement

رجحان

WP2Social Auto Publish Powered By : XYZScripts.com