Connect with us
Friday,23-April-2021

قومی

مسلم یونیورسٹی میں دھرنے پر بیٹھے طلباء کا ساتویں روز بھی دھرنا جاری

Published

on

علی گڑھ مسلم یونیورسٹی میں طلباءو بی جے پی لیڈران کے درمیان ہوئے تصادم کے بعد اپنے مطالبات کو لیکر دھرنے پر بیٹھے طلباء کا ساتویں روز بھی دھرنا جاری ہے جہاں سیاسی جماعتوں سمیت سابق طلباء کے وفود کے آنے کا سلسلہ جاری ہے وہیں مقرین اپنے اپنے طریقہ سے طلباء کی حوصلہ افزائی کے لئے دھرنے کو جائز ٹھہرانے کا کام کر رہے ہیں وہیں دوسری جانب بر سر اقتداربھارتیہ جنتا پارٹی کے لیڈران بھی طلباء کے خلاف کاروائی کئے جانے کے لئے متعدد وزراء وافسران پر دباؤ بنائے ہیں۔
ضلع و پولس انتطامیہ بھی اپنی کوششوں سے حالات پر نظر بنائے رکھنے کے علاوہ جانچ کے بعد کاروائی کئے جانے کی مہم میں لگا ہوا ہے۔
واضح ہو کہ گذشتہ کئی روز قبل مسلم یونیورسٹی میں منعقد ہونے والی تمام مسلم تنظیموں کے اعلیٰ عہدے داران کی ایک سیمینار میں ایم آئی ایم کے صدر و ممبر پارلیامنٹ اسد الدین اویسی کی شمولیت کی مخالفت کر رہے بی جے پی کارکنان کی کارگذاری کی کوریج کرنے کے نام پر ایک پرائیویٹ چینل کی اینکر نے بغیر اجازت مسلم یونیورسٹی کیمپس میں داخل ہوکر اس وقت سنسنی پھیلا دی جب اس نے لائیو ٹیلی کاسٹ کے دوران مسلم یونیورسٹی کو دہشت گردی کا اڈہ بتاتے ہوئے اپنا بیان جاری رکھا حالانکہ اس درمیان طلباء کے وہاں پہنچنے سے قبل ہی سیکیورٹی افسران نے اس لائیو کوریج کو روکنے کی پر زور کوشش کی لیکن ٹی وی رپورٹر اس کے باوجود اپنا کوریج اسی طرح جاری رکھا یہاں تک کہ کیمپس میں طلباء کی بھیڑ جمع ہو گئی اور ٹی وی رپورٹر کو وہاں سے جانا پڑا اسی دوران بے جے پی کے لیڈر مکیش لودھی اور ان کے ہمراہ ایل ایل ایم کے طالب علم اجے سنگھ بھی وہاں پہنچ گئے ٹی وی پورٹر کی حمایت میں وہ طلباء سے الجھ گئے جہاں دونوں گروہوں کے درمیان بحث کے بعد معاملہ مارپیٹ تک جا پہنچا ۔اجے سنگھ کی دادا ٹھاکر دلویر سنگھ موجودہ حکومت میں ممبر اسمبلی ہیں ۔اس اثر رسوخ کے سبب اجے سنگھ و مکیش لودھی کی تحریر پر طلباء کے خلاف ملک سے غداری تک کے الزامات عائد کرتے ہوئے پولس نے رپورٹ درج کر لی لیکن طلباء کی تحریر پر کسی کے بھی خلاف کوئی رپورٹ نہ لئے جانے سے ناراض طلباء یونین مسلم یونیورسٹی طلباء کے ساتھ ساتھ روز سے دھرنے پر ہے ۔جہاں اے ایم یو اولڈ بوائز ایسو سی ایشن دہلی کے عہدے داران نے طلباء سے دھرنے پر جاکر ملاقات کی۔
اس درمیان طلباء یونین کے سابق صدر و دہلی ہائی کورٹ کے معروف وکیل زیڈ کے فیضان نے طلباء کو یقین دہانی کرائی ہے کہ جو بھی قانونی و دیگر مدد ممکن ہوگی اس کو ہر صورت میں ان کی جانب سے دیا جائیگا۔ایسو سی ایشن دہلی کی سیکریٹری جنرل فوزیہ رحمان نے کہا کہ جس طرح سے طالبات دھرنے پر موجود ہیں اور اپنے ادارے کے تحفظ اور اپنے حقوق کے لئے میدان میں ہیں اس سے معلوم ہوتا کہ آج مسلم یونیورسٹی کا طالب علم کسی سے کمزور نہیں ہے وہ اپنے حق کو لینا جانتا ہے۔
انہوں نے اعلان کیا کہ طلباء کے جائز مطالبات کے لئے وہ دہلی میں جنتر منتر پر ایک روزہ دھرنا بھی دیں گی تاکہ حکومت کو یہ احساس کرایا جا سکے کہ مسلم یونیورسٹی کے طلباء اکیلے نہیں ہے اور ان کے ساتھ لاکھوں وہ افراد بھی ہیں جو پوری دنیا میں اس ادارے کی بقاء کے لئے سرگرم عمل ہیں۔

بزنس

پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں مسلسل پانچویں روز استحکام

Published

on

petrol

منگل کے روز مسلسل پانچویں دن پٹرول ڈیزل کی قیمتیں مستحکم رہیں۔ ملک کی سب سے بڑی آئل مارکیٹنگ کمپنی انڈین آئل کارپوریشن کے مطابق قومی دارالحکومت دہلی میں آج پٹرول 90.40 روپے اور ڈیزل 80.73 روپے فی لیٹر پر مستحکم رہا۔ آئل مارکیٹنگ کمپنیوں نے پندرہ دن تک مستحکم رہنے کے بعد گذشتہ جمعرات کو ان میں کمی کی تھی ۔

ممبئی، چنئی اور کولکاتہ میں بھی پٹرول اور ڈیزل کی قیمتیں مستحکم رہی۔ پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں کا روزانہ جائزہ لیا جاتا ہے، اور اسی بناء پر ہر دن صبح چھ بجے سے نئی قیمتوں کا اطلاق ہوتا ہے۔

ملک کے چار بڑے شہروں میں آج پٹرول اور ڈیزل کی قیمتیں حسب ذیل تھیں۔

شہر کا نام —— پیٹرول روپے / لیٹر — ڈیزل روپے / لیٹر
دہلی ————————- 90.40 —————————- 80.73
ممبئی ———————— 96.82 —————————- 87.81
چنئی ————————— 92.43 —————————- 85.73
کولکاتہ ——————– 90.62 ————————– 83.61

Continue Reading

بزنس

پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں دوسرے روز بھی مستحکم

Published

on

petrol

بین الاقوامی بازار میں تیل کی قیمتوں میں نرمی آنے کے بعد ہفتے کے روز گھریلو سطح پر پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں مسلسل دوسرے دن استحکام رہا۔

ملک کی سب سے بڑی آئل مارکیٹنگ کمپنی انڈین آئل کارپوریشن کے مطابق، تیل کی قیمتوں میں کوئی تبدیلی نہیں کی گئی ہے۔

پندرہ دن کے استحکام کے بعد آئل مارکیٹنگ کمپنیوں نے جمعرات کو ان میں کمی کی۔ اس دن دہلی میں پٹرول 16 پیسے کی کمی سے 90.40 روپے فی لیٹر اور ڈیزل کی قیمت بھی 14 پیسے کی کمی سے 80.73 روپے فی لیٹر ہوگئی۔ اس سے قبل دونوں ایندھن کی قیمتوں میں مسلسل 15 دن تک کوئی تبدیلی نہیں کی گئی تھی۔

پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں کا روزانہ جائزہ لیا جاتا ہے، اور اسی بنیاد پر، ہر دن صبح چھ بجے سے نئی قیمتیں نافذ کی جاتی ہیں۔

ملک کے چار میٹرو شہروں میں آج پٹرول اور ڈیزل کی قیمتیں حسب ذیل رہیں۔
شہر کا نام پٹرول روپے ڈیزل روپے
دہلی 90.40 80.73
ممبئی 96.82 87.81
چنئی 92.43 85.73
کولکتہ 90.62 83.61

Continue Reading

بزنس

کووڈ کی وجہ سے ریل خدمات میں کوئی کٹوتی نہیں ہوگی : ریلوے بورڈ چیئرمین

Published

on

railway

کووڈ کی وباء کے تیزی سے پھیلنے کی وجہ سے ملک گیر سطح پر لاک ڈاؤن کے خدشات کے پیش نظر ہندوستانی ریلوے نے آج واضح کیا ہے کہ کووڈ کے نام پر کسی کو بھی خوف زدہ ہونے کی ضرورت نہیں ہے۔ ریلوے خدمات میں کوئی کٹوتی نہیں کی جائے گی، اور ڈیمانڈ کے مطابق اضافی ٹرینیں چلائی جائیں گی۔

ریلوے بورڈ کے چیئرمین اور چیف ایکزیکیٹو آفیسر (سی ای او) سنیت شرما نے یہاں ایک ورچوئل پریس کانفرنس میں کہا کہ ملک کے کسی بھی حصے میں کسی کو یہ فکر نہیں کرنی چاہئے کہ ریلوے کی خدمات بند ہوسکتی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ریلوے 1490 میل ایکسپریس ٹرینیں چلا رہی ہے، جو کووڈ سے پہلے کی مدت کے مقابلے میں 84 فیصد ہے۔ اسی طرح، 92 فیصد یعنی 5387 مضافاتی خدمات بھی چل رہی ہیں۔ صرف مسافر ٹرینوں کی صورت میں، 26 فیصد یعنی 947 ٹرینیں چلائی جا رہی ہیں۔ اس کی وجہ یہ ہے کہ مسافر ٹرینیں غیر محفوظ ہیں، اور مسافروں کے کووڈ پروٹوکول کو یقینی بنانا مشکل ہے۔

مسٹر شرما نے کہا کہ ان خدمات کے علاوہ، ممبئی اور دہلی سے اپریل اور مئی کے مہینوں میں 140 اضافی ٹرینوں کے 483 پھیرے چلانے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ممبئی، پونے، سورت، احمد آباد، بنگلورو، چنئی، دہلی وغیرہ جیسے شہروں میں مختلف اسٹیشنوں پر نظر رکھی جا رہی ہے۔ مختلف زونوں میں جنرل منیجروں کو یہ اختیارات دیئے گئے ہیں، کہ جیسے ہی ان کے دائرہ اختیار میں کسی اسٹیشن سے کسی جگہ تک نئی ریل گاڑی کا مطالبہ کیا گیا ہے، وہ اسے فوری طور پر چلانے کا فیصلہ کر سکتے ہیں۔ اس کے لئے اضافی ریک فراہم کی گئی ہیں۔

Continue Reading
Advertisement

رجحان

WP2Social Auto Publish Powered By : XYZScripts.com